وفاقی کابینہ کانوازشریف کی قیادت پر اظہار اعتماد،مستعفی نہ ہونے کے فیصلے کی توثیق۔

 وزیراعظم کا سازشی عناصر کے مطالبے پر مستعفی ہونے سے انکار
13 جولائی 2017 (22:01)
0

وزیراعظم محمد نوازشریف نے واضح طورپر کہا ہے کہ وہ سازشی عناصر کے ٹولے کے مطالبے پرمستعفی نہیں ہوںگے ۔انہوں نے یہ اعلان جمعرات کے روز اسلام آباد میں وفاقی کابینہ کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔

کابینہ نے وزیراعظم کی قیادت پر مکمل اعتماد کا اظہارکیا اور ان کے مستعفی نہ ہونے کے فیصلے کی توثیق کی ہے۔وزیراعظم نے کہا کہ ان کے خاندان نے سیاست میں کچھ نہیں کمایا بلکہ زیادہ تر کھویا ہے انہوں نے کہا کہ پاکستان مسلم لیگ نے عام انتخابات میں ان لوگوں سے کہیں زیادہ ووٹ حاصل کئے جو استعفے کا مطالبہ کر رہے ہیں۔نواز شریف نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ ترقی کے سفر میں خلل نہیں آنے دیا جائے گاکیونکہ ماضی میں ملک سیاسی بحران کی پہلے ہی بھاری قیمت ادا کر چکا ہے۔
وزیر اعظم نے کہا کہ اربوں روپے مالیت کے منصوبوں پر عملدرآمد جاری ہے لیکن بدعنوانی کا کوئی سکینڈل سامنے نہیں آیا۔وفاقی کابینہ نے مختلف ممالک کے ساتھ تعاون کے کئی معاہدوں اور مفاہمتی یادداشتوں سے متعلق تجاویز کی منظوری دی۔اجلاس میں مالدیپ کے ساتھ ایک کروڑ ڈالر کی ڈیفنس کریڈٹ لائن کھولنے اور سیاحت کے شعبے میں تعاون کے بارے میں مفاہمتی یادداشتوں کیلئے بات چیت شروع کرنے کی منظوری دی گئی۔
کابینہ نے آذربائیجان ، سربیا ، ویتنام اور برازیل کے ساتھ فضائی سروس کے معاملات پر مذاکرات کا آغاز کرنے کی بھی منظوری دی۔آذربائیجان اور تاجکستان کے ساتھ تجارت کے فروغ میں تعاون کے لئے معاہدوں پر دستخط کرنے کی بھی منظوری دی گئی۔اجلاس نے انڈونیشیا ، ترکی اور پولینڈ کے ساتھ دفاعی تعاون کے معاہدوں جبکہ روس کے ساتھ تعلیم ، مالیات اور بنکاری کے شعبوں میں تعاون کے لئے مفاہمتی یادداشتوں پر دستخطوں کی منظوری بھی دی۔