نامعلوم موٹرسائیکل سواروں نے ایس پی کی گاڑی پر اندھادھند فائرنگ کی۔

کوئٹہ میں دہشتگردی کے حملے میں ایس پی سمیت4 اہلکار شہید
13 جولائی 2017 (13:25)
0

کوئٹہ میں آج فائرنگ کے واقعے میں قائد آباد تھانے کے سپرنٹنڈنٹ پولیس مبارک شاہ سمیت چار پولیس اہلکاروں شہید ہو گئے۔پولیس ذرائع نے ریڈیو پاکستان کے کوئٹہ کے نمائندے کو بتایا کہ نامعلوم موٹرسائیکل سواروں نے ایس پی کی گاڑی پر اندھادھند فائرنگ کی۔لاشوں اور زخمیوں کو سول ہسپتال کوئٹہ منتقل کر دیا گیا ہے۔

صدر ممنون حسین ، وزیراعظم محمد نواز شریف ، وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان اور بلوچستان اور پنجاب کے وزرائے اعلیٰ نے پولیس پر دہشت گردی کے حملے کی شدید مذمت کی ہے۔ایک پیغام میں حملے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے صدر مملکت نے ملک سے دہشتگردی کے خاتمے کے لئے قومی عزم کا اعادہ کیا۔
وزیراعظم نے حملے میں قیمتی جانوں کے ضیاع پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا وزیر داخلہ نے متعلقہ حکام سے واقعے کے بارے میں رپورٹ طلب کی ہے۔وزیراعلیٰ بلوچستان نواب ثنااﷲ خان زہری نے کہا کہ دہشت گردوں کے مذموم عزائم ہر صورت ناکام بنائے جائیں گے۔وزیراعلیٰ پنجاب نے شہید پولیس اہلکاروں کو شاندار خراج عقیدت پیش کیا۔

آج کوئٹہ میں شہید ہونے والے چار پولیس اہلکاروں کی نماز جنازہ تیسرے پہر پولیس لائنز کوئٹہ میں ادا کی گئی ۔
بلوچستان پولیس کے انسپکٹر جنرل، فرنٹیئر کور کے انسپکٹر جنرل اور اعلی سول اور فوجی حکام نے نمازجنازہ میں شرکت کی ۔
بعدازاں شہدا کی میتیں ان کے آبائی علاقوں کو بھجوائی دی گئیں ۔