File Photo

قوم آج سترواں یوم آزادی اس عہد کی تجدید کے ساتھ منا رہی ہے کہ پاکستان کو حقیقی اسلامی فلاحی مملکت بنایا جائے گا
13 اگست 2017 (08:56)
0

یوم آزادی آج  اس عزم کی تجدید کے ساتھ منایا جارہاہے کہ کسی بھی خطرے کے خلاف مادروطن کا تحفظ کیا جائے گا اور بابائے قوم قائداعظم محمد علی جناح کے تصور کے مطابق اسے ایک حقیقی اسلامی فلاحی ریاست بنایا جائیگا ۔دن کا آغاز وفاقی دارالحکومت میں اکتیس اور صوبائی دارالحکومتوں میں اکیس توپوں کی سلامی سے ہوا۔نماز فجر کے بعد ملک کی ترقی، سلامتی یکجہتی، امت مسلمہ کے اتحاد اور کشمیریوں کی دیرینہ جدوجہد میں کامیابی کیلئے خصوصی دعائیں مانگیگئیں
۔

قومی اسمبلی کے احاطے میں پرچم کشائی دن کی سب سے اہم تقریب ہوگی۔ صدر ممنون حسین، وزیراعظم شاہد خاقان عباسی اور چین کے نائب وزیراعظم وانگ یانگ تقریب میں مشترکہ طور پر قومی پرچم لہرائیں گے۔ اس موقع پر صدر قوم سے خطاب کریں گے۔ریڈیو پاکستان یوم آزادی پر دن بھر خصوصی پروگرام نشر کریگا۔

ادھر تمام اہم سرکاری اور نجی عمارتوں ، سڑکوں اور شاہراہوں کو چراغاں ، قومی جھنڈوں ، قومی مشاہیر کی تصاویر ، بینرز اور جھنڈیوں کے ذریعے سجایا گیا ہے جو انتہائی دلکش منظر پیش کررہے ہیں۔
صوبائی دارالحکومتوں ، ضلعی ہیڈکوارٹرز اور دیگر اہم قومی اداروں میں بھی پرچم کشائی کی تقریبات ہوں گی۔

ادھر تمام اہم سرکاری اور نجی عمارتوں ، سڑکوں اور شاہراہوں پر نہایت دلفریب چراغاں کیا گیا ہے اور انہیں قومی جھنڈوں ، قومی مشاہیر کی تصاویر ، بینرز اور جھنڈیوں کے ذریعے بہت خوبصورتی سے سجایا گیا ہے جو انتہائی دلکش منظر پیش کررہی ہیں۔
مختلف تنظیموں نے اس دن کے سلسلے میں سیمینار ، کانفرنسوں ، لیکچرز، مباحثوں، تقریری مقابلوں، نمائشوں ، کوئز مقابلوں ، سٹیج ڈراموں اور مشاعروں سمیت کئی تقریبات کا اہتمام کیا ہے۔

صدر، وزیراعظم ، چین کے نائب وزیراعظم ، چیئرمین سینیٹ اور قومی اسمبلی کے سپیکر کے ہمراہ آج پارلیمنٹ ہائوس میں جمہوریت کے گمنام مشاہیر کی یادگار پر پھولوں کی چادر چڑھائیں گے۔
اطلاعات کی وزیر مملکت مریم اورنگزیب کی صدارت میں اتوار کے روز پارلیمنٹ ہائوس میں ایک اجلاس ہوا جس میں اس موقع پر انتظامات کا جائزہ لیا گیا۔ یوم آزادی کی تقریبات کے سلسلے میں رات گیارہ بج کر انسٹھ منٹ پر پریڈ گرائونڈ شکرپڑیاں میں شاندار آتش بازی کااہتمام کیا گیا۔
ملک کے دیگر حصوں کی طرح بلوچستان میں بھی سترواں یوم آزادی جوش وجذبے سے منایاجائے گا ۔

دن کی اہم تقریب صوبائی اسمبلی میں ہوگی جہاں وزیراعلیٰ نواب ثناء اﷲ زہری قومی پرچم لہرائیں گے۔گورنر ہائوس اور بلوچستان ہائی کورٹ میں بھی ایسی ہی تقریبات ہوں گی ۔