سیف نے اپنے کالج کے دنوں میں انتہائی مسحور کن نظمیں لکھیں ۔

شاعر اور نغمہ نگار سیف الدین سیف کی آج 22ویں برسی منائی جارہی ہے
12 جولائی 2017 (15:26)
0

شاعر اور نغمہ نگار سیف الدین سیف کی آج بائیسویں برسی منائی جارہی ہے ۔وہ بیس مارچ 1922 کو امرتسر میں پیدا ہوئے۔انہوں نے اپنے کالج کے دنوں میں انتہائی مسحور کن نظمیں لکھیں بعد میں سیف الدین سیف لاہور منتقل ہوگئے، برصغیر کی تقسیم کے بعد سیف الدین سیف نے 1949 میں اپنی پہلی فلم ہچکولے کی ۔
''امانت'' اور '' نویلی'' ان کی ابتدائی فلمیں تھیں، تاہم انہیں 1953 میں فنی کامیابی اس وقت حاصل ہوئی جب فلم ''غلام'' اور ''محبوب'' میں ان کے گانے مقبول ہوئے۔
ان کی شاعری '' رباعی'' ''غزل'' طویل اور مختصر نظموں سمیت ادب کی تمام اصناف کا احاطہ کرتی ہے تاہم ان سب میں غزل ان کی پسندیدہ صنف تھی۔
ان کی نظموں کے مجموعے کا نام Kham e kakvl جو بہترین غزلوں اور نظموں کا مجموعہ ہے ۔
سیف الدین سیف نے 1993 میں لاہور میں 72 سال کی عمر میں وفات پائی۔