وزیر داخلہ نے کہا کہ میتھیو بیرٹ کو آئندہ تین روز میں مُلک بدر کیا جائے گا۔

 حزب اختلاف سیاسی مفاد کیلئے بد عنوانی کے مسئلے کو اچھال رہی ہے:نثار
12 اگست 2016 (19:12)
0

وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے کہا ہے کہ ناپسندیدہ قرار دیے گئے امریکی باشندے میتھیو بیرٹ کو مشترکہ تحقیقاتی ٹیم کی رپورٹ کی روشنی میں آئندہ تین روز میں مُلک بدر کیا جائے گا۔
اسلام آباد میں ایک نیوز کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ تحقیقاتی رپورٹ کے مطابق میتھیو بیرٹ جاسوس نہیں ہے لیکن وہ قابلِ اعتراض سرگرمیوں میں ملوث پایا گیا۔
وزیر داخلہ نے کہا کہ امریکی باشندے کو پاکستان نے 2011 ء میں ناپسندیدہ قرار دے کر مُلک بدر کیا تھا۔ لیکن اس کے باوجود ہوسٹن میں پاکستانی قونصلیٹ نے انہیں ویزا جاری کر دیا۔
انہوں نے کہا کہ میتھیو بیرٹ کو ویزا جاری کرنے میں غفلت برتنے والے عہدیداروںکے خلاف کاروائی کی جارہی ہے تاہم اسکی شناخت کرنے والے کو انعام دیا جائے گا۔
کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ کی تصدیقی مہم کے بارے میں چوہدری نثار علی خان نے کہا کہ تین کروڑ سے زائد کارڈز کی تصدیق کی جاچکی ہے۔
انہوں نے کہا کہ اب تک تیس ہزار غیر ملکیوں کی شناخت ہوچکی ہے جن کے کارڈ بلاک کئے گئے ہیں۔ اگر ان کی تصدیق ہوگی تو ان کو بحال کر دیا جائے گا تاہم تصدیق نہ ہونے کی صورت میں ان کے خلاف 31اگست کے بعد کارروائی کی جائے گی۔
انہوں نے عوام اور ذرائع ابلاغ سے اس قومی مہم کو کامیاب بنانے کی اپیل کی۔

وزیر داخلہ نے کہا کہ پاکستان اور بھارت کے درمیان تنازعات کے حل کیلئے مذاکرات ہی واحد راستہ ہیں لیکن بھارت نے ہمیشہ مذاکرات کے دروازے بند رکھے ہیں اور پاکستان کو بدنام کیا ہے۔
انہوں نے کہا کہ بھارتی فورسز کی جانب سے مقبوضہ کشمیر کے عوام پر مظالم پر کوئی پاکستانی خاموش نہیں رہ سکتا۔
بھارتی وزیر داخلہ کی اسلام آباد میں حالیہ سارک وزرائے داخلہ کانفرنس کے اختتام سے قبل ہی واپسی کے حوالے سے چوہدری نثار علی خان نے کہا کہ میں نے صرف وطن کا دفاع کیا۔
وفاقی وزیر نے کہا کہ دنیا نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان کی کامیابیوں کا اعتراف کیا ہے۔
انہوں نے کہا کہ دہشت گردوں کو سرحد پار سے مدد مل رہی ہے۔
وزیر داخلہ نے کہا کہ حزب اختلاف بدعنوانی کے خلاف اقدامات میں سنجیدہ نہیں ہے لیکن سیاسی مفادات کی خاطر معاملے سے فائدہ اٹھا رہی ہے۔