نواز شریف نے ان خاندانوں کے دس دس لاکھ روپے کا اعلان کیا جن کے خاندان کے افراد سیلاب کی نذر ہو گئے۔

وزیراعظم کی سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں نقصانات کا تخمینہ لگانے کی ہدایت
11 ستمبر 2014 (18:11)
0

وزیراعظم نواز شریف نے آزادکشمیر کے بارشوں اور سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں نقصانات کا تخمینہ لگانے کی ہدایت کی ہے۔ وہ آج (جمعرات) آزادکشمیر میں فارورڈ کہوٹہ اور حویلی کے سیلاب زدگان سے خطاب کر رہے تھے۔


وزیراعظم نے کہا کہ وہ تازہ صورتحال کا اندازہ لگانے کے لئے ایک بار پھر کشمیر کا دورہ کریں گے اور نقصانات کے تخمینے کی روشنی میں امداد اور بحالی کے کام کا جائزہ لیں گے۔
انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت سیلاب سے تباہ شدہ مکانوں کی تعمیر نو کے لئے ضروری امداد فراہم کریگی۔  نواز شریف نے ان خاندانوں کے دس دس لاکھ روپے کا اعلان کیا جن کے خاندان کے افراد سیلاب کی نذر ہو گئے۔وزیراعظم نے کہا کہ وہ آزادکشمیر کی ترقی پر مکمل توجہ دے رہے ہیں۔


اسلام آباد میں دھرنوں کے حوالے سے وزیراعظم نے کہا کہ پاکستان منفی سیاست کا متحمل نہیں ہو سکتا ۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں ماضی کی غلطیوں سے سبق سیکھنا چاہئیے اور منفی سرگرمیاں ترک کر کے تعمیری سیاست کرنی چاہئیے۔ وزیراعظم نے کہا کہ دھرنوں کے ذریعے ترقی کا راستہ بند کرنے کی کوششیں کی جا رہی ہیں تاہم انہوں نے کہا کہ ترقی کا سفر جاری رہے گا۔انہوں نے کہا کہ دنیا آگے نکل گئی ہے اور ہم دھرنوں کی سیاست میں پھنسے ہوئے ہیں۔ وزیراعظم نے حویلی میں یونیورسٹی کیمپس کھولنے کا اعلان کیا۔ انہوں نے کہا کہ اسلام آباد سے مظفرآباد تک ایک ریلوے لائن بچھائی جائے گی۔