توقع ہے کہ یہ بندرگاہ ایک سال میں چھ کروڑ ٹن سامان کی نقل وحمل کے قابل ہو گی۔