جنرل راحیل شریف نے کہا ہے کہ فوج سوات میں امن و سلامتی یقینی بنانے کیلئے اپنا کردار ادا کرتی رہے گی۔

پاک فوج نے فاٹا،مالاکنڈ میں 700ترقیاتی اسکیموں پر کام شروع کر دیا
11 نومبر 2016 (18:13)
0

بری فوج کے سربراہ جنرل راحیل شریف نے کہا ہے کہ فوج سوات میں امن و سلامتی لانے کے لیے اپنا کردار ادا کرتی رہے گی۔
وہ جمعہ کے روزسوات کے علاقوں مینگورہ ، کانجو اور خوازہ خیلہ میں مختلف تقریبات سے خطاب کر رہے تھے۔
انہوں نے دہشت گردی کے خلاف کھڑے ہونے اور دہشت گردوں کو وادی سے ہمیشہ کے لیے نکالنے میں سیکورٹی فورسز کا ساتھ دینے پر سوات کے عوام کا شکریہ ادا کیا۔
انہوں نے کہا کہ سوات میں کنٹونمنٹ کے قیام سے دہشت گردوں کی حوصلہ شکنی ہوگی۔
قانون نافذ کرنے والے اداروں کا اعتماد بڑھے گا اور علاقے میں امن کو درپیش کسی خطرے سے نمٹنے کے لیے فوج دستیاب ہوگی جس سے مستقل بنیادوں پر احساس تحفظ پیدا کرنے میں مدد ملے گی۔
انہوں نے کہا کہ کنٹونمنٹ کے قیام سے علاقے کی سماجی و اقتصادی ترقی میں بھی مدد ملے گی۔
جنرل راحیل شریف نے کہا پاک فوج اب تک فاٹا اور مالاکنڈ میں سماجی شعبے میں سات سو بڑے اور چھوٹے منصوبے شروع کر چکی ہے۔
خیبر پختونخوا کے وزیر اعلیٰ پرویز خٹک ، گورنر اقبال ظفر جھگڑا اور مقامی عمائدین نے سوات کے عوام کے فائدے کے لیے کنٹونمنٹ کے قیام پر پاک فوج کے سربراہ اور پاک فوج کا شکریہ ادا کیا۔
بری فوج کے سربراہ نے حال ہی میں مکمل ہونے والے شیخ خلیفہ بن زید ماڈل ہسپتال سوات اور زیرِ تعمیر جدید ترین آرمی پبلک سکول کا بھی دورہ کیا۔