Tuesday, 10 December 2019, 04:11:47 pm
کشمیر کے دیرینہ تنازعہ کے حل کیلئے تیسرے فریق کی ثالثی واحد راستہ ہے،وزیرخارجہ
September 12, 2019

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ کشمیر کے دیرینہ تنازعہ کے حل کے لئے تیسرے فریق کی ثالثی واحد راستہ ہے۔

ایک سوئس ٹی وی کے ساتھ انٹرویو میں انہوں نے کہا کہ اطلاعات ہیں کہ سوئس حکام نے بھارتی رہنماؤں کے ساتھ اپنی متوقع ملاقات میں مسئلہ کشمیر کو اپنے ایجنڈے میں شامل کیا ہے جو ایک خوش آئند پیش رفت ہے۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ بھارت کو اقوام متحدہ کی قراردادوں اور عالمی قوانین پر عمل کرنا ہو گا۔

انہوں نے بھارت پر زور دیا کہ وہ فوری طور پر کرفیو اٹھائے اور مقبوضہ کشمیر کے عوام کو جینے کا حق دے جہاں بچے اپنے سکول جانے سے قاصر ہیں اور مریض طبی سہولتوں سے محروم ہیں۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ مقبوضہ وادی میں مواصلات کی بندش کے باعث وہاں کی حقیقی صورتحال سامنے نہیں آ رہی۔ انہوں نے مسئلہ کشمیر کو اُجاگر کرنے کے لئے بین الاقوامی ذرائع ابلاغ اور انسانی حقوق کی عالمی تنظیموں کے کردار کی تعریف کی۔

افغانستان کے بارے میں انہوں نے کہا کہ پاکستان نے خطے میں امن اور استحکام کے لئے طالبان کو مذاکرات کی میز پر لانے میں موثر کردار ادا کیا۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان اس بات پر یقین رکھتا ہے کہ افغان مسئلے کا کوئی فوجی حل نہیں ہے۔