Monday, 10 August 2020, 05:12:49 am
زندگی اورذرائع معاش کے درمیان توازن کی پاکستان کی مستقل پالیسی کی عالمی برادری نے توثیق کی ہے:عاصم سلیم
July 11, 2020

اطلاعات ونشریات کےبا رے میں وزیراعظم کے معاو ن خصوصی لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈ عاصم سلیم باجوہ نے کہاہے کہ کوروناکی وباء کے دوران زندگی اورذرائع معاش کے درمیان توازن برقراررکھنے کی پاکستان کی مستقل پالیسی کی عالمی برادری کی طرف سے توثیق کی جارہی ہے۔
عاصم سلیم باجوہ نے آکسفیم کی ایک رپورٹ کے جواب میں ایک ٹوئیٹ پیغام میں کہاکہ دنیا رشک کے ساتھ پاکستان کی تقلید کررہی ہے جس سے ہماری حکمت عملی کی تائید ہوئی ہے اور اس وباء کوشکست دے کرہماری قوم نے خود کوایک بہادرقوم ثابت کیاہے۔
آکسفیم کی تازہ ترین رپورٹ میں خبردارکیاگیاہے کہ بھوک سے یومیہ بارہ ہزار افراد تک کی موت ہوسکتی ہے اوریہ شرح اموات اپریل میں کوروناسے ہونے والی یومیہ دس ہزار اموات سے زیادہ ہوسکتی ہے۔
انہوں نے کہاکہ یہ رپورٹ وزیراعظم عمران خان کی طرف سے اختیار کی گئی حکمت عملی کی ایک اورتوثیق ہے جس کے تحت ملک میں مکمل لاک ڈائون کی سختی سے مخالفت کی گئی اور زندگیوں اور روزگارمیں توازن برقراررکھنے اوربھوک اورغربت سے بچائوکے لئے سمارٹ لاک ڈائون کی حکمت عملی اپنائی گئی۔
امریکی خبررساں ادارے بلوم برگ نیوزنے بھی سمارٹ لاک ڈائون کی حکمت عملی کو ایسے حالات میں معمولات زندگی کی بحالی کی جانب امید کی کرن قرار دیاہے جب دنیا کورونا کیخلاف ویکسین کی منتظرہے۔
وزیراعظم عمران خان کی اس متوازن حکمت عملی کی دنیا کے ممتازسائنسدانوں، اداروں اور عالمی ذرائع ابلاغ نے بھی توثیق کی ہے۔