Thursday, 13 December 2018, 03:57:45 am
عالمی بینک کی درمیانی مدت میں پاکستان کی 5.9فیصد سالانہ شرح ترقی کی پیش گوئی
January 10, 2018

عالمی بنک نے پیشگوئی کی ہے کہ پاکستان میں ملکی وسائل کے موثر استعمال، سرمایہ کاری اور برآمدات میں مسلسل اضافے سے درمیانی مدت کیلئے معاشی ترقی کی سالانہ شرح پانچ اعشاریہ نوفیصد تک ہوجائیگی۔عالمی بنک نے جنوری 2018میں معیشت کی متوقع عالمی صورتحال کے حوالے سے اپنی جائزہ رپورٹ میں کہا ہے کہ دوہزار سترہ ، اٹھارہ کے دوران پاکستان کی مجموعی ملکی پیداوار کی شرح نمو پانچ اعشاریہ پانچ فیصد جبکہ دوہزار اٹھارہ انیس کے دوران یہ شرح پانچ اعشاریہ آٹھ فیصد تک ہوجائیگی۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ مالی سال دوہزار سولہ سترہ کے دوران ترقی کی شرح پانچ اعشاریہ تین فیصد رہی جو حکومت کے مقرر کردہ پانچ اعشاریہ سات فیصد کے ہدف سے کچھ کم رہی۔مالی سال دوہزارسترہ اٹھارہ کی پہلی ششماہی کے دوران معاشی سرگرمیوں میں اضافہ جاری رہا جو چین پاکستان اقتصادی راہداری سے متعلق ترقیاتی اور سرمایہ کاری کے منصوبوں کی بدولت ملکی اشیاء کی طلب میں اضافے کی بدولت دیکھا گیا۔