یہ اقدام خیبرپختونخوا میڈیکل ٹیچنگ انسٹی ٹیوٹ اصلاحات ایکٹ 2015ء کے نفاذ کے خلاف ڈاکٹروں کی ہڑتال روکنے کیلئے کیا گیا ہے۔

خیبرپختونخواکےتمام سرکاری تدریسی ہسپتالوں میں لازمی سروسز ایکٹ 1958 نافذ
09 فروری 2016 (13:43)
0

خیبرپختونخوا میں تحریک انصاف کی حکومت نے صوبے کے تمام سرکاری تدریسی ہسپتالوں میں لازمی سروسز ایکٹ 1958 نافذ کردیا ہے۔یہ اقدام خیبرپختونخوا میڈیکل ٹیچنگ انسٹی ٹیوٹ اصلاحات ایکٹ 2015ء کے نفاذ کے خلاف ڈاکٹروں کی ہڑتال روکنے کیلئے کیا گیا ہے۔

یہ فیصلہ صوبے میں اکثر افراد کیلئے حیران کن ہے کیونکہ تحریک انصاف وفاقی حکومت کی جانب سے پی آئی اے میںلازمی سروسز ایکٹ کے نفاذ کی مخالفت کررہی ہے۔پشاور میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے صوبائی وزیر صحت شہرام خان ترکزئی نے کہا کہ خیبر پختونخوا اسمبلی کے منظور کئے گئے قوانین پر پورا نہ اترنے والے ملازمین کو استعفیٰ دے دینا چاہئے۔