سولر پاور پلانٹس کی درآمد سے بجلی کی رسد میں موجود غیرمعمولی قلت اور لوڈشیڈنگ کم کرنے میں مدد ملے گی۔

وزیراعظم کی نجی شعبے کو ڈیوٹی فری سولر پینلز درآمد کرنے کی اجازت
09 دسمبر 2014 (12:42)
0

وزیراعظم نواز شریف نے نجی شعبے کو ڈیوٹی فری سولر پینلز درآمد کرنے کی اجازت دی ہے جس کا مقصد توانائی کے متبادل ذرائع کو فروغ دینا ہے۔وزیراعظم نے یہ منظوری وزیر خزانہ اسحق ڈار کی سربراہی میں قائم متبادل توانائی ذرائع کے بارے میں کمیٹی کی سفارشات کی روشنی میں دی ہے۔فیڈرل بورڈ آف ریونیو نے اس سلسلے میں کسٹمز کے متعلقہ محکموں کو ضروری ہدایات جاری کی ہیں۔


متبادل توانائی بورڈ کا موقف تھا کہ مقامی سطح پر سولر پینلز کی تیاری محدود ہے اور اس حوالے سے مطلوبہ بین الاقوامی معیارات کی کمی ہے۔بورڈ نے سولر پینلز پر درآمدی ڈیوٹی ختم کرنے کی بھی سفارش کی تھی۔سولر پاور پلانٹس کی درآمد سے بجلی کی رسد میں موجود غیرمعمولی قلت اور لوڈشیڈنگ کم کرنے میں مدد ملے گی۔