Thursday, 13 December 2018, 04:48:52 am
سندھ یونیورسٹیز اینڈ انسٹی ٹیویشن لاء ترمیمی بل کثرت رائے سے منظور
March 09, 2018

   جمعہ کے روزکراچی میں سندھ اسمبلی نے سندھ یونیورسٹیز اینڈ انسٹی ٹیویشن لاء ترمیمی بل 2018کثرت رائے سے منظور کرلیا ۔بل کے تحت 23سرکاری یونیورسٹیوں اور2 اداروں کے قوانین میں ترمیم کی گئی ہے اور اب گورنر ان کے وائس چانسلر نہیں ہونگے اور تمام تعلیمی اداروں کے نگران وزیراعلیٰ ہونگے ۔ وزیر اعلیٰ کے پاس وائس چانسلر اور پرووائس چانسلر کی تقرری کا اختیار ہوگا اور داخلہ پالیسی حکومت کے کنٹرول میں ہوگی ۔ حزب اختلاف کی جماعتوں نے بل کی منظوری پر احتجاج کیا ان کا موقف تھا کہ اس بل سے تعلیمی اداروں کے معاملات میں حکومت کو غیر ضروری کنٹرول حاصل ہوگیا ہے ۔ ایوان نے یونیورسٹی آف ماڈرن سائنسز ٹنڈو محمد خان بل 2017ء کی بھی منظوری دی ۔ ایوان کا اجلاس اب پیر کی صبح دس بجے پھر ہوگا ۔