وزیراعظم نے حالیہ موسلادھار بارشوں کے باعث ہونیوالے نقصانات اور امدادی کارروائیوں کاخود جائزہ لیا ۔

 وزیراعظم نواز شریف کا راولاکوٹ کا دورہ
08 ستمبر 2014 (13:22)
0

وزیراعظم محمد نواز شریف نے پیر کوآزادکشمیر کے علاقہ راولاکوٹ کا دورہ کیا اور حالیہ موسلادھار بارشوں کے باعث ہونے والے نقصانات اور امدادی کارروائیوں کا خود جائزہ لیا ۔
آزاد جموں و کشمیر کے صدر سردار یعقوب خان، وزیراعظم آزاد و جموں کشمیر چوہدری عبدالمجید، اور سابق وزیراعظم آزاد جموں و کشمیر راجہ فاروق حیدر ان کے ہمراہ تھے۔
راولاکوٹ پہنچنے کے فوراً بعد انہیں چیف سیکرٹری آزادجموں و کشمیر نے بارشوں اور لینڈ سلائیڈنگ سے ہونے والے نقصانات سے آگاہ کیا۔
وزیراعظم کو بتایا گیا کہ موسلادھار بارشوں کے باعث لینڈ سلائیڈنگ سے بنیادی ڈھانچے اور نجی مکانات کو بڑا نقصان پہنچا، بڑی رابطہ سڑکیں بند ہو گئیں اور پلوں کو نقصان پہنچا۔
بارشوں سے دریائے جہلم میں اونچے درجے کا سیلاب آ گیا، بارشوں سے دریائے جہلم، پونچھ اور نیلم میں اونچے درجے کا سیلاب آ گیا اور آزاد جموں و کشمیر کی حکومت نے امدادی کارروائیوں کے لئے ضلعی انتظامیہ، ریسکیو 1122کے اہلکاروں اور فوجی جوانوں کی خدمات حاصل کیں۔
وزیراعظم کو بتایا گیا کہ متاثرہ خاندانوں کو خیمے، خوراک اور غیر خوردنی اشیاء فراہم کی جا رہی ہیں۔
بارشوں سے متاثرہ تمام علاقوں میں بجلی بحال کر دی گئی ہیں اور نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی اور این جی اوز متاثرین کو امداد فراہم کر رہی ہیں۔
وزیراعظم کو بتایا گیا کہ سیلاب سے 24 ہزار افراد بے گھر ، 64 جاں بحق اور 109 زخمی ہوئے جبکہ 1800 گھر مکمل طور پر تباہ اور 4 ہزار مکانات کو جزوی طور پر نقصان پہنچا، 185 دکانوں کا بھی نقصان ہوا۔
موسلادھار بارشوں سے 12 پل اور پانی کی سپلائی کی سکیموں، بجلی، ٹرانسمیشن لائنز اور 9 پاور پراجیکٹس کو بھی نقصان ہوا۔