نوازشریف نے کہا کہ بجلی کی پیداوار میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے جس سے صنعت، زراعت اور تجارت کو فروغ ملے گا۔

لوڈشیڈنگ کے مستقل خاتمے کی جانب کامیابی سے بڑھ رہے ہیں،وزیر اعظم
07 جولائی 2017 (17:54)
0

وزیراعظم محمد نوازشریف نے کہا ہے کہ ان کی حکومت ملک سے لوڈشیڈنگ کے مستقل خاتمے کی جانب کامیابی سے بڑھ رہی ہے۔
انہوں نے یہ بات جمعہ کے روزجھنگ کے قریب حویلی بہادر شاہ کے 760میگاواٹ پیداواری صلاحیت کے پہلے یونٹ کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔
وزیراعظم نے کہا کہ بجلی کی پیداوار میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے جس سے صنعت، زراعت اور تجارت کو فروغ ملے گا۔
انہوں نے کہا کہ اس منصوبے کے پہلے یونٹ کی اکیس ماہ میں تکمیل ناقابل یقین ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت لوگوں کو رعایتی نرخوں پر بجلی کی فراہمی پر بھی کام کررہی ہے۔
محمد نوازشریف نے کہا کہ ہمارے دشمن ملک میں پاکستان مسلم لیگ نون کے دور میں تمام شعبوں میں بے مثال ترقی پر مایوس ہیں ۔
انہوں نے کہا کہ حکومت کی انتھک کوششوں کی بدولت ملک میں صنعت اور زراعت کے شعبے ترقی کررہے ہیں۔ سڑکوں کے نیٹ ورک کو توسیع دی جارہی ہے اور سیاحت کا شعبہ بھی ترقی کررہاہے۔
نوازشریف نے کہا کہ داسوڈیم کا سنگ بنیاد رکھا گیا ہے جس کی استعداد 4500میگاواٹ ہوگی اور یہ پیر سے کام شروع کردے گا۔
انہوں نے کہا کہ بھاشاڈیم سے بھی بجلی کی اتنی ہی پیداوار حاصل ہوگی اس کے ساتھ ساتھ اس سے آبیاشی کے مقاصد کیلئے پانی بھی فراہمی کیا جائے گا۔
وزیراعظم نے کہا کہ جولوگ حکومت کے خلاف سازشیں کررہے ہیں انہیں پاکستان مسلم لیگ نون نے بار بار انتخابات میں شکست دی ہے۔
انہوں نے کہا کہ یہ عناصر سازشیں کرکے چور دروازے کے ذریعے اقتدار میں آنا چاہتے ہیںلیکن پاکستان کے عوام ان کے عزائم کو ناکام بنادیں گے۔
انہوں نے کہا کہ ہمارے سیاسی مخالفین انتخابات میں ہمارا مقابلہ نہیں کرسکتے اور پاکستان مسلم لیگ نون انہیں عوام کی مدد سے شکست دے گی۔
وزیراعظم نے کہا کہ لواری ٹنل منصوبہ 26ارب روپے کی لاگت سے مکمل کیا جارہا ہے اور اس سرنگ کا آئندہ چند ماہ میں افتتاح کردیا جائے گا اس طرح خیبرپختونخوا میں ہزارہ موٹروے کو مکمل کیا جائے گا انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت سندھ مین تھر کوئلے کے منصوبے کی بھی حمایت کررہی ہے اس کے ساتھ ساتھ سندھ مین دیگر منصوبے اور موٹروے تعمیر کئے جارہے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ پاکستان میں ریلوے کے نظام کو بہتر بنانے پر آٹھ سو ارب روپے خرچ کئے جارہے ہیں۔
پانی وبجلی کے وزیرخواجہ محمد آصف نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حویلی بہادرشاہ، بھکی اور بلوکی بجلی گھروں سے قومی گرڈ میں 3600میگاواٹ بجلی کا اضافہ ہوگا۔
انہوں نے کہا کہ جون 2013میں بجلی کی طلب ورسد میں 67فی صد فرق تھا جو کہ اب کم ہو کر 19فی صد رہ گیا ہے۔
وفاقی وزیر نے کہا کہ بجلی کی ترسیل اور تقسیم کے نظام کو بھی بہتر بنایا گیا ہے۔
وزیراعلی پنجاب شہباز شریف نے اس موقع پر کہا کہ شفافیت کی وجہ سے حویلی بہادر شاہ، بھکی اور بلوکی بجلی گھروں کے منصوبوں میں 168ارب روپے کی بچت کی گئی ہے۔
انہوں نے کہا کہ نئے بجلی گھروں سے روزگار کے نئے مواقع پیدا ہونے کے علاوہ تمام شعبوں میں ترقی ہوگی۔
اس سے قبل پروجیکٹ ڈائریکٹر راشدمحمودلنگڑیال نے کہا کہ بولی کے عمل میں شفافیت کی وجہ سے پیداواری لاگت کافی کم ہے جس سے صارفین کو فائدہ پہنچے گا۔