Friday, 18 October 2019, 11:24:45 am
سینکڑوں بھارتی شخصیات کا مودی اور صدر کے نام مراسلہ، مقبوضہ کشمیر میں عائد سخت پابندیوں کو ناقابل قبول قرار دیا
October 07, 2019

سینکڑوں بھارتی شخصیات نے اپنے وزیر اعظم نریندر مودی اور صدر رامناتھ کووند کے نام ایک مراسلہ ارسال کیا ہے جس میں مقبوضہ کشمیر میں عائد سخت پابندیوں اورمواصلاتی ذرائع کی معطلی کو ناقابل قبول قراردیا گیا ہے۔ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق مراسلے پر دستخط کرنے والے 284افراد میں ماہرین تعلیم ، صحافی ، سیاسی رہنما اور دیگرشامل ہیں ۔

انہوںنے اپنے مراسلے میں کہاہے کہ اگر بھارتی حکومت مقبوضہ کشمیر میں اظہار رائے اور قانون سازی کا حق چھین سکتی ہے تو باقی ملک میں اس کو ایسا کرنے سے کون روک سکتا ہے ۔ مراسلے میں کہاگیا کہ اب بھی دیر نہیں ہوئی ۔ مقبوضہ علاقے میں لاک ڈائون ختم کیا جائے ، اسمبلی انتخابات منعقد کئے جائیں اور وہاں کے لوگوں کو دفعہ 370 پر فیصلہ کرنے کا موقع دیا جائے۔انہوں نے بھارتی آئین کے آرٹیکل کا حوالہ دیتے ہوئے حکومت سے ایسا کرنے کی اپیل کی جو 1954 سے گزشتہ ماہ تک مسلمان اکثریت کے علاقے کی خصوصی حیثیت کی ضمانت دیتا تھا۔ مراسلے میں کہاگیا کہ جموںوکشمیر کی خصوصی حیثیت کے خاتمے اور ریاست کو دو حصوں میں تقسیم کرنے کے معاملے پر مقامی لوگوں سے کوئی مشاورت نہیں کی گئی۔ ایشیا واچ اور ایمنسٹی انٹرنیشنل سمیت انسانی حقوق کی بین الاقوامی تنظیموں نے بھارتی حکومت سے کئی بار مطالبہ کیا کہ علاقے میں پابندیاں ختم کی جائیں اور سیاسی رہنمائوں کو رہا کیا جائے۔