Tuesday, 22 September 2020, 09:25:39 am

مزید خبریں

 
حریت کانفرنس کا پاکستان کے منظور کر دہ نئے نقشے کا خیر مقدم
August 07, 2020

بھارت کے غیر قانونی زیر تسلط جموں وکشمیر میں کل جماعتی حریت کانفرنس نے پاکستان کی طرف سے منظور کئے گئے نئے نقشے کا خیرمقدم کیا ہے جس میں مقبوضہ جموں وکشمیر کو پاکستان کا حصہ دکھایاگیا ہے ۔
حریت کانفرنس کے جنرل سیکریٹری مولوی بشیر احمدنے سرینگر میں ایک میڈیا انٹرویومیں کہا کہ پاکستان کے نئے نقشے سے دو قومی نظریہ کی عکاسی اور حقیقت کا اظہار ہوتا ہے ۔ انہوں نے کہاکہ تنازعہ جموں وکشمیر ایک تاریخی حقیقت ہے اور کشمیر قدرتی طورپر پاکستان کا حصہ ہے تاہم بھارت نے 1947میں غیر قانونی طورپر اس پر قبضہ کر لیاتھا۔
انہوںنے کہاکہ کشمیری جموںوکشمیر کے ایک حصے کوآزاد کرنے میں کامیاب ہو گئے تھے جسے آزاد جموں وکشمیر کا نام دیا گیا اوروہ دوسرے حصے کو بھی بھارت کے غیر قانونی تسلط سے آزاد کرانے کیلئے اپنی جدوجہد جاری رکھے ہوئے ہیں۔
ادھرکل جماعتی حریت کانفرنس کے ترجمان نے سرینگر میں ایک بیان میں پانچ اگست کو اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے اجلاس کا خیرمقدم کیا ہے جس میں تنازعہ کشمیر اور بھارت کے غیر قانونی زیر تسلط مقبوضہ کشمیر کی موجودہ صورتحال پر بحث کی گئی۔