Saturday, 20 July 2019, 07:09:07 pm
حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے ٹھوس اور موثر اقدامات کر رہی ہے،گنڈا پور
July 07, 2019

وفاقی وزیر امور کشمیر و گلگت بلتستان علی امین خان گنڈا پور نے کہا ہے کہ حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے ٹھوس اور موثر اقدامات کر رہی ہے۔ وہ اسلام آباد میں یوم یکجہتی کشمیر کے حوالے سے ایک کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے۔ وفاقی وزیر نے کہا کہ ہمیں مسئلہ کشمیر کے حوالے سے دن منانے اور مذمتی بیانات سے آگے بڑھ کر اقدامات کرنے ہیں اور حکومت اس ضمن میں ٹھوس اقدامات کر رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے اور موجودہ حکومت نے برسراقتدار آتے ہی مسئلہ کشمیر سے متعلق ایک واضح پالیسی اپنائی اور وزیراعظم عمران خان نے بھارت کو مسئلہ کشمیر پر بامقصد مذاکرات کی دعوت دی اور بعدازاں وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے بھی اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے فورم پر مسئلہ کشمیر کو بھرپور طریقے سے اجاگر کیا۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کے مثبت اقدامات کا مودی کی انتہاپسند حکومت نے ہٹ دھرمی سے جواب دیا۔ انہوں نے کہا کہ مودی سرکار کی انتہاپسند پالیسیز کی وجہ سے جنوبی ایشیا کا امن مسلسل خطرے میں ہے اور خود بھارت کے اندر اقلیتوں کی زندگیاں مودی کی ہندوانتہاپسند پالیسیوں کا شکار ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اس کے باوجود ہم خطے میں دیرپا امن کے لئے پرعزم ہیں اور مذاکرات کیلئے ہمارے دروازے کھلے ہیںتاہم پاکستان کی مذاکرات کی پیشکش کو ہماری کمزوری ہرگز نہ سمجھا جائے۔وفاقی وزیر نے کہا کہ بھارت مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالی کا سلسلہ جاری رکھے ہوئے ہے اور آٹھ لاکھ بھارتی فوج کی موجودگی میں مقبوضہ وادی میں حق خودارادیت کی تحریک کو دبانے کے لئے کشمیریوں کا ماورائے عدالت قتل، خواتین کی عصمت دری اور بدترین تشدد کا سلسلہ بغیر کسی روک ٹوک کے جاری ہے۔ انہوں نے کہا کہ مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے ہمیں مسلسل محنت کرنی ہے اور دنیا کے سامنے بھارت کا انسانی حقوق کی پامالی کے حوالے سے بدترین چہرہ بے نقاب کرنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالی کے حوالے سے آفس آف ہیومن رائٹس کمشنر کی رپورٹ نے بھارت کا اصل چہرہ دنیا کو دکھایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس رپورٹ کی بنیاد پر ایک انکوائری کمیشن تشکیل دیا جائے تاکہ بھارت کے بدنما چہرے کو مزید بے نقاب کیا جا سکے۔ وفاقی وزیر نے کہا کہ پاکستان کی حکومت اور عوام حق خودارادیت کی جدوجہد کرنیوالے کشمیریوں جو مقبوضہ وادی میں پاکستان کا جھنڈا اٹھائے روزانہ جانوں کی قربانیاں پیش کر رہے ہیں۔ ان کی ہر حال میں سیاسی، سفارتی اور اخلاقی حمایت جاری رکھیں گے۔