جنرل راحیل شریف نے کہاہے کہ پاکستان اپنے تمام ہمسایہ ملکوں کے ساتھ اچھے تعلقات کا خواہشمند ہے تاہم کسی کو مادروطن کے دفاع کے لئے ہمارے مشترکہ عزم کا غلط اندازہ نہیں لگانا چاہئے۔

دشمن کی کسی بھی جارحیت کا بھرپور جواب دیا جائیگا:آرمی چیف
06 اکتوبر 2016 (12:22)
0

بری فوج کے سربراہ جنرل راحیل شریف نے دوٹوک الفاظ میں کہا ہے کہ ہمارے دشمن کی جانب سے کسی بھی جارحیت یا دفاعی لحاظ سے غلط اندازے کا بھرپور جواب دیا جائیگا  آج رسالپور میں کیڈٹس کی پاسنگ آؤٹ پریڈ سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پاکستان اپنے تمام ہمسایہ ملکوں کے ساتھ اچھے تعلقات کا خواہشمند ہے تاہم کسی کو مادروطن کے دفاع کے لئے ہمارے مشترکہ عزم کا غلط اندازہ نہیں لگانا چاہیے۔
راحیل شریف نے کہا کہ پاکستان ایک ذمہ دارملک ہے اور وہ تمام ممالک کے ساتھ باہمی احترام اور برابری کی بنیاد پر دوستی کی پالیسی پر کاربند رہنے کیلئے پرعزم رہے گا تاہم ہماری مسلح افواج ملک کو اندرونی یا بیرونی طور پر درپیش کسی بھی خطرے سے نمٹنے کیلئے مکمل طور پر تیار ہیں۔داخلی محاذ پر بری فوج کے سربراہ نے کہا کہ آپریشن ضرب عضب کے ذریعے دہشتگردوں کے خلاف گھیرا تنگ کر دیا ہے۔انہوں نے کہا کہ دہشت گردوں کے مکمل خاتمے کے مقصد کے حصول میں پاک فضائیہ نے اہم کردار ادا کیا ہے۔
بری فوج کے سربراہ نے کہا کہ ہم نے دہشت گردی کے ڈھانچے کے خاتمے میں نمایاں کامیابیاں حاصل کی ہیں۔بری فوج کے سربراہ نے کہا کہ ہماری کامیابیوں کی بدولت پاکستان کے امن اور خوشحالی کے دشمن بوکھلاہٹ کا شکار ہیں۔انہوں نے کہا کہ اپنی کامیابیوں کو پائیدار بنانے کیلئے بھرپور کوششیں ہی آگے بڑھنے کا راستہ ہیں جس کے لئے ہم کوئی کسر اٹھا نہیں رکھیں گے۔
پاک فضائیہ کی پیشہ ورانہ صلاحیت کو سراہتے ہوئے بری فوج کے سربراہ نے کہا کہ یہ بات باعث اطمینان ہے کہ پاک فضائیہ اپنی صلاحیتوں کو بڑھانے کیلئے تندہی سے کام کر رہی ہے اور جاری مشق جنگی تیاریوں کیلئے اسکے واضح جذبے کا مظہر ہے۔انہوں نے نئے کیڈٹوں کو مبارکباد دی اور امید ظاہر کی کہ وہ اپنی پیشہ ورانہ تقاضوں کا مدنظر رکھتے ہوئے مادروطن کے دفاع کیلئے اپنی مہارتوں کو بروئے کار لا ئیں گے۔انہوں نے نئے کیڈٹوں کو بیجز لگائے۔
بحریہ کے سربراہ ائر چیف مارشل سہیل امان بھی اس موقع پر موجود تھے۔مجموعی طور پر ایک سو چھتیس جی ڈی پائلٹ اور بیاسی انجنئیروں نے کورس مکمل کیا۔