Filephoto

مقبوضہ کشمیر: بھارتی فوجیوں اور پولیس اہلکاروں کا کم عمر لڑکے کے جنازے کے شرکاء پر آنسو گیس کا بے دریغ استعمال
05 نومبر 2016 (21:06)
0

مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجیوں اور پولیس اہلکاروں نے آج سرینگر میں ایک کم عمر لڑکے کے جنازے کے شرکاء پر آنسو گیس کا بے دریغ استعمال کیا جس سے 35سے زائد افراد زخمی ہوگئے۔  مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ لڑکے کو بھارتی فوج نے گرفتارکرکے زیر حراست تشدد کا نشانہ بنایاتھا۔ سوگواران نے میت کی تدفین کیلئے صفاکدل سے ایک جلوس کی صورت میں اور آزادی کے حق میں نعرے لگاتے ہوئے مزار شہداء عید گاہ کی طرف مارچ کیا۔ تاہم علاقے میں تعینات بھارتی فورسز کے اہلکاروں نے جنازے کے شرکا ء کو آگے بڑھنے سے روکنے کے لیے ان پر آنسو گیس کی شدید شیلنگ کی۔
حریت رہنمائوں میرواعظ عمر فاروق، محمد یاسین ملک، محمد یوسف نقاش، جاوید احمد میر اور جموں وکشمیر ڈیمو کریٹک فریڈم پارٹی نے اپنے بیانات میں قیصر صوفی کے جنازے پر طاقت کے وحشیانہ استعمال کی شدید مذمت کی۔
دریں اثناء بھارتی فوجیوں نے اپنی ریاستی دہشتگردی کی تازہ کارروائی میں ضلع شوپیاں کے علاقے دھوبجن میں محاصرے اور تلاشی کے دوران ایک کشمیری نوجوان کو شہید کردیا ۔ وادی کشمیرمیں بھارتی فورسز کی طرف سے شہریوں کے قتل اور دیگر مظالم کے خلاف آج 120 ویں روز بھی مکمل ہڑتال کی گئی۔
ادھرکشمیری عوام نے 1947ء کے شہدائے جموں کو ان کے یوم شہادت پر شاندار خراج عقیدت پیش کیا ہے۔ مقبوضہ علاقے میں سخت پابندیوں کے باعث سیمینار اور دیگر تقاریب منعقد نہیں کی جاسکیں۔