نوازشریف نے کہاکہ دہشت گردی کے خاتمے،ہم آہنگی کے فروغ کیلئے ضرب عضب کیساتھ ساتھ ضرب قلم کی بھی اشد ضرورت ہے۔

 اہل قلم دہشت گردی کے خاتمے کیلئے کردارادا کریں:وزیراعظم
05 جنوری 2017 (16:18)
0

وزیراعظم نواز شریف نے ادیبوں، شاعروں اور دانشوروں پر زور دیا ہے کہ وہ دہشت گردی کے خاتمے اور امن کے فروغ میں مرکزی کرداراداکریں۔

وہ جمعرات کو تیسرے پہر اسلام آباد میں لسانیات، ادب اور معاشرہ کے بارے چار روزہ عالمی کانفرنس کی افتتاحی نشست سے خطاب کررہے تھے۔
وزیراعظم نے کہاکہ دہشت گردی کے خاتمے اور ہم آہنگی کے فروغ کیلئے ضرب عضب کے ساتھ ساتھ ضرب قلم کی بھی اشد ضرورت ہے۔
نواز شریف نے کہا کہ بہادر مسلح افواج نے دہشت گردی کے خلاف جنگ کے حکومت کے سیاسی عزم کو حقیقت کی شکل دی اور دہشت گردوں کی کمر توڑنے میں کامیاب ہوئی۔
محمد نواز شریف نے کہا کہ ادبی سرگرمیوں کی عدم موجودگی سے انتہا پسندی، عدم برداشت، ناانصافی اور فرقہ واریت کو راستہ ملتا ہے، ہم ادبی اور ثقافتی سرگرمیوں کو فروغ دے کر اس خامی پر قابو پاسکتے ہیں۔
انہوں نے قومی تاریخ اور ادبی ورثے کے تحفظ اور اسے اگلی نسل تک منتقل کرنے کیلئے ٹھوس اقدامات پر زور دیا۔
وزیراعظم نے ادب اور ادبی سرگرمیوں کے فروغ کیلئے پچاس کروڑ روپے سے انڈوومنٹ فنڈ قائم کرنے کا اعلان کیا، انہوں نے کہا یہ فنڈ متعلقہ اداروں کی ضروریات کے ساتھ ساتھ ادیبوں کے مسائل کے حل کیلئے استعمال ہوگا۔
وزیراعظم نے کہا کہ ادیبوں اور شعراء کے اسکا لر شپ میں بتدریج اضافے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔
اسی طرح اُردو اور علاقائی زبانوں کے لئے ایوارڈ کی تعداد گیارہ سے بڑھا کر بیس کر دی جائے گی ، انتظار حسین کے نام سے ایک ادبی ایوارڈ بھی شامل کیا جائے گا جس میں دس لاکھ روپے کا نقد انعام ہوگا۔
وزیراعظم نے کہا کہ بیمہ سکیم میں اب تین سو چون کی بجائے سات سو ادیبوں اور فنکاروں کو شامل کیا گیا ہے اور ساری رقم حکومت ادا کرے گی۔
اپنے خطاب میں قومی تاریخ اور ادبی ورثے کے مشیر عرفان صدیقی نے ادبی اور ثقافتی تنظیموں کی عظمت رفتہ بحال کرنے کیلئے حکومتی اقدامات پر روشنی ڈالی۔
استنبول یونیورسٹی کے شعبہ اردو کے سربراہ ڈاکٹرHALIL-TOKER نے کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دانشوروں کے ہاتھوں میں روایتی ہتھیاروں کے بجائے قلم ہیں جوزیادہ طاقتور ہتھیار ہیں۔