اطالوی اقتصادی ترقی کے نائب وزیر نے کہا کہ پاکستان کیساتھ ایگرو فوڈ پراسیسنگ ، بنیادی ڈھانچے کی ترقی ، انفارمیشن ٹیکنالوجی اور قابل تجدید توانائی کے شعبوں میں تعاون کو فروغ دیں گے۔

اطالوی تاجروں کیلئے پاکستان پرکشش ملک ہے: آئیون سکالفراٹو
05 دسمبر 2016 (19:12)
0

پاکستان اور اٹلی باہمی مفاد کیلئے ایگرو فوڈ پراسیسنگ ، بنیادی ڈھانچے کی ترقی ، انفارمیشن ٹیکنالوجی اور قابل تجدید توانائی کے شعبوں میں تعاون کو فروغ دیں گے۔
یہ بات اٹلی کے اقتصادی ترقی کے نائب وزیر آئیون سکالفراٹو نے پیر کے روز اسلام آباد میں پاک اٹلی مشترکہ اقتصادی کمیشن کے دوسرے اجلاس کے بعد صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہی۔
انہوں نے کہا کہ پاکستان آبادی کے لحاظ سے دنیا کے چھٹے ملک اور متوسط طبقے کے افراد میں اضافے کی بدولت اٹلی کے تاجروں اور کاروباری شخصیات کیلئے انتہائی پرکشش ملک ہے۔
اٹلی کے نائب وزیر اٹلی کی چالیس کمپنیوں اور کاروباری اداروں کے نمائندوں کے ہمراہ پاکستان کے دورے پر ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ان کا ملک پاکستان میں اٹلی کی مصنوعات کے خریدار تلاش کررہاہے۔
آئیون سکالفراٹو نے چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبے کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان وسطی اور جنوبی ایشیاء کے سنگم پر واقع ہے اور یہاں تجارت کے وسیع امکانات موجود ہیں۔
اقتصادی امور ڈویژن کے سیکرٹری طارق باجوہ نے شرکاء کو بتایا کہ پاکستان اور اٹلی کے درمیان سالانہ تجارتی حجم ایک ارب دس کروڑ ڈالر ہے اور اسے پانچ ارب ڈالر تک لے جانے کی کوششیں جاری ہیں۔