جماعت اسلامی کے اہم رہنمائوں کے خلاف ماضی کے مقدمات اور پھانسیوں سے بنگلہ دیش میں تشدد میں اضافہ ہوا ہے۔

بنگلہ دیش میں جماعت اسلامی کے رہنما میر قاسم کو پھانسی دے دی گئی
04 ستمبر 2016 (09:31)
0

بنگلہ دیش میں جماعت اسلامی کے ایک اور اہم رہنما میر قاسم علی کو 1971 ء میں مبینہ جنگی جرائم میں ملوث ہونے کے جرم میں پھانسی دے دی گئی۔

اس سے پہلے بنگلہ دیش کی سپریم کورٹ میں اپنی سزا کے خلاف اپیل مسترد ہونے کے بعد علی نے صدر سے معافی مانگنے سے انکار کردیا تھا۔
جماعت اسلامی کے اہم رہنمائوں کے خلاف ماضی کے مقدمات اور پھانسیوں سے بنگلہ دیش میں تشدد میں اضافہ ہوا ہے۔

پاکستان نے بنگلہ دیش میں جماعت اسلامی کے ممتاز رہنما میر قاسم علی کی پھانسی پر گہرے افسوس کا اظہار کیا ہے۔
اسلام آباد میں دفتر خارجہ کے ایک بیان میں کہا گیاکہ بنگلہ دیش کی حکومت کو1974 ء کے سہ فریقی معاہدے کا احترام کرنا چاہیے جس میں فیصلہ کیا گیا تھا کہ جنگی مقدمات میں کوئی کارروائی نہیں کی جائے گی۔
بیان میں کہا گیا کہ حزب اختلاف کو اس طرح کے ہتھکنڈوں اور مقدمات سے دبانا جمہوریت کی روح کے منافی ہے۔
دفتر خارجہ نے کہا کہ پاکستان کو میر قاسم علی کی پھانسی پر گہرا صدمہ ہے جنہیں ناقص عدالتی عمل کے ذریعے دسمبر انیس سو اکہتر سے پہلے کے مبینہ جرائم پر پھانسی دی گئی۔