Wednesday, 20 November 2019, 08:15:35 pm
حکومت چند ہزار لوگوں کو وزیراعظم سے استعفے کا مطالبہ کرنے کی اجازت نہیں دے سکتی،علی محمد
November 02, 2019

پارلیمانی امور کے وزیر مملکت علی محمد خان نے کہا ہے کہ مولانا فضل الرحمن کو گزشتہ سال کے عام انتخابات میں ان کے اپنے حلقے کے لوگوں نے بھی مسترد کر دیا تھا۔

انہوں نے ہفتے کی رات ریڈیو پاکستان کے خبروں اور حالات حاضرہ کے چینل سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ حکومت آئین اور اظہار رائے کی آزادی پر یقین رکھتی ہے تاہم وہ16 سے20 ہزار لوگوں کو وزیراعظم سے استعفے کا مطالبہ کرنے کی اجازت نہیں دے سکتی۔

انہوں نے کہا کہ یہ مطالبہ ملک کے لوگوں کیلئے قابل قبول نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ یہ بات انتہائی دلچسپ ہے کہ جمعیت علمائے اسلام (ف) کے سربراہ مسئلہ کشمیر کے بارے میں باتیں کر رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ مولانا نے دس سال تک کشمیر کمیٹی کی قیادت کی تاہم انہوں نے اس مسئلے کو کسی عالمی فورم پر اجاگر نہیں کیا۔

علی محمد خان نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان نے اس اہم مسئلے کو دنیا کے سب بڑے پلیٹ فارم پر موثر انداز میں اجاگر کیا اور اب اس مسئلہ اور بھارتی مظالم پر عالمی سطح پر بات چیت کی جا رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ حکومت عمران خان کی قیادت میں کوششیں جاری رکھے گی۔