دفتر خارجہ کے ترجمان نفیس ذکریا نے کہا ہے کہ الزام تراشی کے رویے سے امن کی کوششوں کو نقصان پہنچے گا۔

پاکستان نے کابل دھماکے میں ملوث ہونے کے افغان الزامات مسترد کر دیئے
01 جون 2017 (15:27)
0

دفتر خارجہ نے افغانستان کا یہ بے بنیاد الزام سختی سے مسترد کیا ہے کہ کابل میں حالیہ دہشت گرد حملے میں پاکستان ملوث ہے۔آج اسلام آباد میں ہفتہ وار نیوز بریفنگ کے دوران دفتر خارجہ کے ترجمان نفیس ذکریا نے کہا کہ الزام تراشی کے رویے سے امن کی کوششوں کو نقصان پہنچے گا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان خود دہشت گردی سے شدید متاثر ہوا ہے۔
انہوں نے کہا کہ دنیا کے کسی دوسرے ملک کی نسبت پاکستان کے افغانستان میں امن واستحکام سے زیادہ مفادات وابستہ ہیں۔ترجمان نے کہا کہ افغانستان میں امن کے لئے ہمارا عزم خلوص پر مبنی ہے اور اس حوالے سے کسی شک وشبے کی گنجائش نہیں۔
تاہم انہوں نے کہا کہ یہ بات افسوسناک ہے کہ وہ عناصر جنہیں افغانستان میں امن سے کوئی سروکار نہیں اور دو ہمسایہ ملکوں کے درمیان تعلقات کو نقصان پہنچانا چاہتے ہیں اور اپنے مذموم ایجنڈے کے لئے پاکستان کو بدنام کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔
ترجمان نے کہا کہ بھارت کشمیر کے مسئلے سے توجہ ہٹانے کیلئے سرحد پر کشیدگی بڑھا رہا ہے اور جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزیاں کر رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ کنٹرول لائن پر بھارت کی حالیہ بلااشتعال فائرنگ سے دوشہری شہید اور سات زخمی ہو گئے۔
نفیس ذکریا نے کہا کہ بھارت پاکستان میں دہشت گردی کرا رہا ہے۔