توانائی کے کئی نئے منصوبے شروع کرنے کیلئے وفاقی بجٹ 2014-15ء میں دوسوساٹھ ارب روپے مختص کئے جائینگے

حکومت کا اگلے بجٹ میں توانائی منصوبوں پر توجہ مرکوز رکھنے کا ارادہ
01 جون 2014 (11:47)
0

حکومت نے ملک میں بجلی کی شدید قلت پرقابوپانے کیلئے اگلے بجٹ میں توانائی کے منصوبوں پر توجہ مرکوز رکھنے کا ارادہ رکھتی ہے ۔

سرکاری ذریعوں کے مطابق جاری سکیموں کی تکمیل کیلئے کام تیز کرنے کے علاوہ توانائی کے کئی نئے منصوبے شروع کرنے کیلئے وفاقی بجٹ 2014-15ء میں دوسوساٹھ ارب روپے مختص کئے جائینگے۔


نئے منصوبوں میں دیامربھاشاڈیم اورداسوپن بجلی منصوبے شامل ہیں جس سے آٹھ ہزار میگاواٹ بجلی پیدا ہوگی۔ نوسوانہتر میگاواٹ کے نیلم جہلم پن بجلی منصوبے پر کام تیز کیاجائے گا ۔
اسی طرح منگلہ ڈیم پربجلی پیدا کرنے والے یونٹ بہتر بنانے کیلئے خصوصی رقم مختص کی جارہی ہے جس سے قومی گرڈ میں تین سو دس میگاواٹ بجلی کا اصافہ ہوگا۔


آئندہ مالی سال میں تربیلا ڈیم کے پن بجلی کا چوتھا توسیعی منصوبہ شروع کرنے کا بھی فیصلہ کیاگیا ہے جس سے دوہزار آٹھ سو میگاواٹ بجلی پیدا ہوگی۔ گلگت بلتستان میں سات ہزار ایک سو میگاواٹ کے بُنجی پن بجلی منصوبے کی تکمیل اورچترال میں گولان گول پن بجلی منصوبے کیلئے بھی خصوصی رقم مختص کی جائے گی۔ پن بجلی منصوبوں سے سستی بجلی مہیا ہوگی جس سے عوام کو ریلیف ملے گا۔