نیوزی لینڈ نے ویسٹ انڈیزکو تیسرے ون ڈے کرکٹ میچ میں 159 رنز سے شکست دیکر پانچ میچوں کی سیریز 1-1 سے برابر کردی۔

01 جنوری 2014 (12:58)
0

 کورے اینڈرسن اور جیسی رائیڈر کی سنچریوں کی بدولت کیویز ٹیم نے مقررہ 21 اوورز میں 4 وکٹوں کے نقصان پر 283 رنز بناکر مہمان ٹیم کو میچ میں کامیابی کے لیے پہاڑ جیسا 284 رنز کا ہدف دیا۔


کورے اینڈرسن ناقابل شکست 131 اور جیسی رائیڈر 104 رنز کے ساتھ نمایاں رہے۔ ویسٹ انڈیز کی طرف سے ہولڈر نے 2 جبکہ نارائن اور ملر نے ایک ایک کھلاڑی کو آئوٹ کیا۔ جواب میں ویسٹ انڈیز ٹیم مقررہ 21 اوورز میں 5 وکٹوں کے نقصان پر 124 رنز بناسکی۔ اور نیوزی لینڈ نے ویسٹ انڈیز کو میچ میں بآسانی 159 رنز سے ہارا دیا۔کیویز ٹیم کی طرف سے کک لینا گھان نے 2 جبکہ کائل ملز، جیسی رائیڈر اور نیشام نے ایک ایک کھلاڑی کو آئوٹ کیا۔  بدھ کو ئینز ٹائون ایونٹس سنٹر میں دونوں ٹیموں کے درمیان میچ شروع ہوا تو ویسٹ انڈین کپتان ڈیوائن براوو نے ٹاس جیت کر پہلے فیلڈنگ کا فیصلہ کیا۔ نیوزی لینڈ کی طرف سے مارٹن گپٹل اور جیسی رائیڈر نے اننگز کا آغاز کیا۔ مارٹن گپٹل 1 رن بناکر جیسن ہولڈر کی گیند پر دنیش رامدین کے ہاتھوں کیچ آئوٹ ہوگئے۔



کپتان برینڈن میکولم دوسرے آئوٹ ہونے والے کھلاڑی تھے جو 33 رنز بناکر نارائن کی گیند پر سیمنز کے ہاتھوں کیچ آئوٹ ہوگئے، روز ٹیلر تیسرے آئوٹ ہونے والے کھلاڑی تھے جو 9 رنز بناکر نیکیتا ملر کی گیند پر پائول کے ہاتھوں کیچ آئوٹ ہوگئے، اس کے بعد آل رائونڈر جیسی رائیڈر اور آل رائونڈر کورے اینڈرسن نے ملکر چوتھی وکٹ کی شراکت میں 191 قیمتی رنز بنے تاہم اس موقع پر جیسی رائیڈر اپنے ون ڈے کیریئر کی تیسری سنچری مکمل کرنے کے بعد 104 رنز بناکر جیسن ہولڈر کی گیند پر نیکیتا ملر کے ہاتھوں کیچ آئوٹ ہوگئے، کورے اینڈرسن نے ایک اینڈ پر اپنی دھواں دھار بلے باری کا سلسلہ برقرار رکھتے ہوئے نہ صرف شاہد خان آفریدی کا ون ڈے کرکٹ میں تیز ترین سنچری کا ریکارڈ توڑ ڈالا بلکہ اپنی کیریئر بیسٹ اننگز کھیلتے ہوئے پہلی سنچری بھی سکور کی انہوں نے ناقابل شکست 131 رنز بنائے لیوک رونچی 3 رنز کے ساتھ ناٹ آئوٹ رہے۔



 بارش کے باعث میچ 21 21 اوورز تک محدود کردیا گیا تھا اور کیویز ٹیم نے مقررہ 21 اوورز میں 4 وکٹوں کے نقصان پر 283 رنز بناکر ویسٹ انڈیز ٹیم کو میچ میں کامیابی کے لیے پہاڑ جیسا 284 رنز کا ہدف دیا۔ ویسٹ انڈیز کی طرف سے ہولڈر نے 2 جبکہ نارائن اور ملر نے ایک ایک کھلاڑی کو آئوٹ کیا۔ جواب میں 284 رنز کے تعاقب میں ویسٹ انڈیز کی طرف سے جانسن چارلس اور لینڈل سیمنز نے اننگز کا آغاز کیا۔ مہمان ٹیم کا آغاز انتہائی مایوس کن تھا، چارلس صفر پر کائل ملز کی گیند پر آئوٹ ہوگئے، سیمنز دوسرے آئوٹ ہونے والے کھلاڑی تھے جو 13 رنز بناکر مک لیناگھان کی گیند پر آئوٹ ہوئے، کیرن پائول تیسرے آئوٹ ہونے والے کھلاڑی تھے جو 1 رن بناکر مک لینا گھان کی  گیند پر آئوٹ ہوئے، والٹن چوتھے آئوٹ ہونے والے کھلاڑی تھے جو 17 رنز بناکر جیسی رائیڈر کی گیند پر آئوٹ ہوئے



 ڈیونارائن پانچویں آئوٹ ہونے والے کھلاڑی تھے جو 29 رنز بناکر نیشام کی گیند پر آئوٹ ہوگئے، کپتان براوو 56 اور رامدین 1 رن کے ساتھ ناٹ آئوٹ رہے اور یوں ویسٹ انڈیز کی ٹیم مطلوبہ ہدف کے تعاقب میں مقررہ 21 اوورز میں 5 وکٹوں کے نقصان پر 124 رنز بناسکی۔ کیویز ٹیم کی طرف سے کک لینا گھان نے 2 جبکہ کائل ملز، جیسی رائیڈر اور نیشام نے ایک ایک کھلاڑی کو آئوٹ کیا۔ نیوزی لینڈ نے ویسٹ انڈیز کو پانچ میچوں کی سیریز کے تیسرے میچ میں 159 رنز سے شکست دیکر سیریز 1-1 سے برابر کردی۔ کورے اینڈرسن کو دھواں دھار بیٹنگ کا مظاہرہ کرنے پر میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا۔