وزیر منصوبہ بندی نے کہا ہے کہ اس منصوبے نے پاکستان کے بارے میں نیا تصور متعارف کرایا ہے۔

چین اور پاکستان براہ راست غیرملکی سرمایہ کاری کے حوالے سے سرفہرست ملکوں طور پر سامنے آئے ہیں:احسن اقبال
01 اپریل 2017 (14:39)
0

منصوبہ بندی کے وزیر احسن اقبال نے کہا ہے کہ چین اور پاکستان براہ راست غیرملکی سرمایہ کاری کے حوالے سے سرفہرست ملکوں طور پر سامنے آئے ہیں ۔وہ آج اسلام آباد میں ماہر اقتصادیات اور چین کی Peking یونیورسٹی میں معاشی تحقیق کے پروفیسر Justin Yifu Lin سے باتیں کر رہے تھے۔
انہوں نے کہا کہ چین پاکستان اقتصادی راہداری نہ صرف پاکستان بلکہ اب پوری دنیا کے لئے اہمیت اختیار کر گئی ہے۔
احسن اقبال نے کہا کہ اس منصوبے نے پاکستان کے بارے میں نیا تصور متعارف کرایا ہے اور پاکستان اور چین کے تعلقات اب تزویراتی شراکت داری میں تبدیل ہو گئے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ بدلتی دنیا میں ایشیاء کی اقتصادی اہمیت میں بھی اضافہ ہو رہا ہے۔
وفاقی وزیر نے اس موقف کا اعادہ کیا کہ پاکستان چین کے ساتھ تجارت ، سرمایہ کاری ، تعلیم ، مواصلات اور صحت سمیت تمام شعبوں میں تعلقات اور تعاون بڑھانا چاہتا ہے۔اس موقع پر چین کے ماہر اقتصادیات Justin Yifu Lin نے کہا کہ چین پاکستان کی ترقی کو اپنی ترقی سمجھتا ہے۔
انہوں نے کہا کہ دونوں ملکوں کے درمیان صنعتی اور تجارتی تعلقات کے فروغ سے خطے میں تجارت کے لئے سازگارماحول قائم کرنے میں مدد ملے گی۔