مقبوضہ کشمیر میں بھارتی وزیراعظم کے مجوزہ دورے کے خلاف کل مکمل ہڑتال کی جائے گی
01 اپریل 2017 (14:03)
0

مقبوضہ کشمیر میں بھارتی وزیراعظم کے مجوزہ دورے کے خلاف کل مکمل ہڑتال کی جائے گی۔ ہڑتال کی اپیل سید علی گیلانی ، میرواعظ عمر فاروق اور محمد یاسین ملک پر مشتمل مشترکہ مزاحمتی قیادت نے کی ہے۔
مشترکہ مزاحمتی قیادت نے سری نگر میں ایک بیان میں کہا ہے کہ نریندر مودی ایک ایسے وقت میں مقبوضہ علاقے کا دورہ کررہے ہیں جب وہاں شہریوںکو شہید کرنے ، انہیں بینائی سے محروم کرنے اور ان کے گرفتاریوں کا سلسلہ مسلسل جاری ہے۔ بیان میں یہ بھی کہا گیا کہ ہزاروں افراد جیلوں میں قیدہیں جبکہ انتظامیہ پرامن سیاسی سرگرمیوں کی بھی اجازت نہیں دے رہی۔

ادھر ، بھارتی فوج کے ہاتھوں تین شہریوں کے شہادت کے واقعہ کے خلاف ضلع بڈگام میں چکدورہ اور ملحقہ علاقوں میں آج مسلسل چوتھے روز بھی ہڑتال ہے۔
کشمیر میڈیا سروس کے مطابق تینوں شہری زاہد رشید ، عامر فیاض اور اشفاق احمد منگل کو چکدورہ میں بھارتی فوج کی پرامن مظاہرین پر بلااشتعال فائرنگ کے نتیجے میں شہید ہو گئے تھے۔
چکدورہ ، Nagam اور Wathora میں تمام دکانیں اور کاروباری مراکز بند ہیں جبکہ سڑکوں پر گاڑیوں کی آمد ورفت معطل ہے۔

ادھر ، بھارتی پولیس نے سرینگر کے لال چوک میں پرامن مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے بڑی تعداد میں آنسوگیس کے گولے پھینکے۔یہ مظاہرے پولیس کے ہاتھوں سرینگر کے علاقے میسوما سے ایک نوجوان کی گرفتاری کے بعد کئے گئے۔
بھارتی پولیس نے مظاہرین پر آنسو گیس کے گولے پھینکے اور چھرے والی بندوق کا استعمال کیا جس کے نتیجے میں مظاہرین اور پولیس کے درمیان چھڑپیں شروع ہوئیں۔